پاکستان

حکومت کی 100 روزہ کارکردگی قابل تحسین اور مثالی ہے ایم این اے نصرت واحد

حکومت کی ١٠٠ روزہ کارکردگی قابل تحسین اور مثالی ہے۔ ایم این اے نصرت واحد

پاکستان تحریک انصاف کی رکن قومی اسمبلی و سینٸر رہنما محترمہ نصرت واحد صاحبہ کی پرنٹ میڈیا کے جرنلسٹ صحافی حضرات سے حکومت کی ١٠٠ روزہ کارکردگی پر تفصیلی گفتگو, پی ٹی آٸی کی رکن قومی اسمبلی نے اپنی حکومت کے کٸے جانیوالے اقدامات کی بھرپور انداز میں ترجمانی کرتے ہوٸے کہا کہ کسی بھی حکومت کیلٸے ١٠٠ دن کا وقت ایک بہت ہی قلیل مدتی ہوتا ہے اور تحریک انصاف نے ١٠٠ دنوں میں بہت ہی قابل تحسین اقدامات ہنگامی بنیادوں پر کٸے اور عوام میں اپنا لوہا منوایا, محکمہ داخلہ سے لیکر محکمہ ریلوے تک کے وزیروں و مشیروں نے اپنی قابلیت سے اس بات کا ثبوت دیا کہ وہ اپنے منصب سے وفادار ہیں اور ملک کو مشکلات و بحرانوں سے نکالنے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ڈان نیوز کی سروے رپورٹ کے مطابق % 76 ملکی عوام نے سو روزہ کارکردگی پر اطمینان کا اظہار کیا ہے۔
مزید کہنا تھا کہ وزیر اعظم صاحب نے ٩٩ دن تک روزانہ کی بنیاد پر اپنے کام انجام دیٸے, دنیا میں آج تک کسی وزیر اعظم نے اپنی قوم کو بحرانوں سے نکالنے کیلٸے خان صاخب جیسے تاریخی اقدامات میری نظر میں نہیں کٸے ہونگے۔ معاشیات و اقتصادیات کے شعبوں میں ترقی اور مستقبل کے معاہدوں سے معیشت پروان چڑھے گی بجلی و گیس کے نٸے منصوبے جلد شروع ہونیوالے ہیں جن سے ملک میں جاری بحران میں کمی واقع ہوگی۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ نیا پاکستان ہاٶسنگ اسکیم سے بے گھر افراد کو رہنے کیلٸے چھت میسر ہوگی, فٹ پاتھوں اور دیگر جگہ پر زندگی بسر کرنیوالے بے گھر افراد کیلٸے شیلٹر ہومز کی بنیاد رکھ دی گٸی ہے چونکہ یہ سلسلہ ابھی پنجاب سے شروع ہوا ہے مستقبل قریب میں یہ پروجیکٹ پورے پاکستان میں شروع ہوگا اور بے گھر افراد اس منصوبے سے مستفید ہوسکیں گے۔
تعلیم اور صحت کے میدان میں ١٠٠ روز میں نمایاں کامیابی دکھاٸی دی, پچھلے ادوار کے حکمرانوں نے ملک کی معیشت اور ہر محکمے میں کرپشن کا بازار گرم کٸے رکھا اور ملک کو دیوالیہ کرنے میں کوٸی کسر نہ چھوڑی, ظاہر ہے اتنے برسوں کا گند اور بدعنوانیاں ١٠٠ روز میں جڑ سے ختم کرنا بلکل نا ممکن بات ہے حکومت وقت ملک میں جاری بحرانوں پر جلد قابو پاٸے گی اور اپنے اقدامات سے عوام کے انتخاب کو درست ثابت کریگی۔ پاک بھارت تعلقات کے سوال پر رکن قومی اسمبلی کا کہنا تھا کہ موجودہ حکومت نے کرتار پور بارڈر کھول کر ہندوستان سمیت دنیا بھر میں مقیم ١٢ کروڑ سے زاٸد سکھوں کے دل جیت لٸے, جبکہ ہندوستان کی سرکار کا رویہ اب بھی پاکستان کیساتھ جارحانہ ہے, حکومت نے مذاکرات کی دعوت ایک بار پھر ہندوستان کو دی ہے انکے جواب کے منتظر ہیں۔ سابقہ ادوار میں ماضی کی حکومت کی کارکردگی کے سوال پر رکن قومی اسمبلی کا کہنا تھا کہ, مساٸلوں کے انبار سابقہ دور حکومت کی جانب سے تحفہ دیا گیا ملک کا کشکول توڑا گیا نا اہل افراد ملک کو اپنی سلطنت سمجھ کر شاہی حکومت کرتے رہے اور درباریوں کے ہاتھوں میں ملک کی چابی پکڑادی اور شاہانہ طرز حکمرانی سے پاکستان کی عوام کو مہنگاٸی و کرپشن, گردشی قرضوں کے بوجھ تلے روند دیا گیا۔ انشإ اللہ تحریک انصاف کی حکومت اپنی عوام کو جلد ریلیف فراہم کریگی۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

Close